Skip to content

10+ مینگوسٹین کے صحت بخش فوائد

  • by
Mangosteen And Their Health Benefits

مینگوسٹین (Garcinia mangostana) کو پرپل مینگوسٹین بھی کہا جاتا ہے۔ اس کا ذائقہ بہت منفرد اور میٹھا-کھٹا ہوتا ہے۔ اسے کھانے کے لیے بیرونی چھلکا اتاریں اور اندر کے پھل کے ٹکڑے کھائیں۔ مینگوسٹین میں طاقتور اینٹی آکسیڈنٹس کی بڑی مقدار پائی جاتی ہے۔

Summary


مینگوسٹین اپنے فینولک کمپاؤنڈز کی وجہ سے ادویات میں استعمال کی جاتی ہے۔ مینگوسٹین کی کیپسولز یورینری ٹریکٹ انفیکشنز (UTIs)، سوزاک، اور ماہواری کی خرابیوں کے علاج میں استعمال کی جاتی ہیں۔

1. مینگوسٹین بہت غذائیت بخش ہے

مینگوسٹین میں 200 گرام (ایک کپ) سرونگ میں 146 کیلوریز ہوتی ہیں۔ مینگوسٹین کے اہم جزو میں زینتھون اور وٹامنز شامل ہیں۔ مینگوسٹین کے پتے، پھل، اور چھلکے سے حاصل کردہ زینتھون میں اینٹی انفلیمیٹری، اینٹی بیکٹیریل، اور اینٹی کینسر خصوصیات ہوتی ہیں۔ مینگوسٹین میں وٹامن C کی فراوانی ہوتی ہے جو کہ ایک طاقتور اینٹی آکسیڈنٹ ہے جو مضبوط امیون سسٹم بنانے میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین میں موجود فولیٹ (وٹامن B9) نئے ریڈ بلڈ سیلز بنا کر انیمیا کو روکتا ہے۔ مینگوسٹین گردے اور جگر کے لیے اچھا ہے۔ مینگوسٹین کے اینٹی آکسیڈنٹس جسم سے فری ریڈیکلز خاص طور پر جگر اور گردے سے نکالتے ہیں اور ہیپاٹک اور رینل فنکشن کو مضبوط بناتے ہیں۔ مینگوسٹین قبض کے لیے بھی اچھا ہے کیونکہ اس پھل میں فائبر خوراک سے سارا پانی جذب کر لیتا ہے۔

2. مینگوسٹین کا جوس، چائے، اور کافی

مینگوسٹین کا جوس یورینری ٹریکٹ انفیکشن (UTI) اور اسہال کے لیے مفید ہے کیونکہ اس میں پانی میں حل ہونے والے اینٹی آکسیڈنٹس ہوتے ہیں۔ یہ پھل پانی میں مالا مال ہوتا ہے لہذا مینگوسٹین کا جوس بلڈ پریشر کو ریگولیٹ کرتا ہے۔ مینگوسٹین کا جوس اپنی زیادہ پانی کی مقدار کی وجہ سے ہاضمہ میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین کی چائے بنانے کے لیے پانی ابالیں اور مینگوسٹین کے چھلکے یا ٹی بیگز ڈال کر 4-5 منٹ کے لیے ڈھانپ دیں اور پیش کریں۔ مینگوسٹین کے چھلکے کی چائے طاقتور اینٹی آکسیڈنٹس کا ذریعہ ہوتی ہے۔ اس میں اینٹی الرجک یا اینٹی مائیکروبیل اثرات ہوتے ہیں۔ اس کے چھلکے میں موجود ایتھینول الرجیز کو کم کرنے میں مدد دیتا ہے۔ MX3 پریمیم کافی جو کہ مینگوسٹین سے بنائی گئی ہے مضبوط اینٹی ملیریا اور اینٹی وائرل خصوصیات رکھتی ہے۔

Mangosteen And Their Health Benefits

3. مینگوسٹین سپلیمنٹس کے فوائد

مینگوسٹین اپنے فینولک کمپاؤنڈز کی وجہ سے ادویات میں استعمال کی جاتی ہے۔ مینگوسٹین کیپسول یورینری ٹریکٹ انفیکشنز (UTIs), گونوریا، اور ماہواری کی خرابیوں کے علاج میں استعمال کیے جاتے ہیں۔ مینگوسٹین سپلیمنٹس سنگین گم انفیکشنز اور آنتوں کے انفیکشنز جیسے کہ ڈسینٹری کے لیے استعمال کیے جاتے ہیں۔

4. ذیابیطس کے لیے مینگوسٹین اچھا ہے

یہ بلڈ شوگر کنٹرول میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین اینٹی آکسیڈنٹس میں مالا مال ہوتا ہے جو خون میں شوگر کی میٹابولزم کو کنٹرول کرتا ہے۔ اگر آپ ذیابیطس کے مریض ہیں تو روزانہ مینگوسٹین کھائیں لیکن ایک کپ سے زیادہ نہ لیں۔

5. حمل کے دوران

حمل کے دوران مینگوسٹین کا استعمال محفوظ ہے۔ یہ بہت غذائیت بخش ہوتا ہے اور اینٹی آکسیڈنٹس اور اینٹی بیکٹیریل خصوصیات سے بھرپور ہوتا ہے جو حاملہ ماؤں کو مختلف انفیکشنز سے بچاتا ہے اور فری ریڈیکلز سے حفاظت کرتا ہے۔ مینگوسٹین حاملہ خواتین کی امیون سسٹم کو بڑھاتا ہے اور انہیں بیماریوں کا زیادہ شکار بناتا ہے کیونکہ اس میں زیادہ وٹامن اور فولیٹ کی مقدار ہوتی ہے۔ مینگوسٹین میں فولیٹ وقت سے پہلے پیدائشی نقائص کو روکتا ہے۔

6. دودھ پلانے والی ماؤں کے لیے

مینگوسٹین کا کم مقدار میں استعمال دودھ پلانے والی ماؤں کے لیے محفوظ ہے کیونکہ یہ ماں اور بچے دونوں کو مختلف بیماریوں سے بچاتا ہے۔ لیکن مینگوسٹین کی فطرت سرد ہوتی ہے اس لیے زیادہ مقدار میں استعمال سے بچے اور ماں دونوں پر اثر پڑتا ہے۔

Mangosteen During Pregnancy

7. بالوں کی نشونما کے لیے مینگوسٹین کے فوائد

مینگوسٹین بالوں کی صحتمند، موٹے اور لمبے ہونے میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین خون کی گردش کو بڑھا کر بالوں کی بہتر نشونما میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین کے اینٹی آکسیڈنٹس خشکی اور بالوں کی جڑوں کی خشکی کو روکتے ہیں۔ مینگوسٹین کا گودا بالوں پر لگانے سے بالوں کی جڑیں اور فالیکلز مضبوط ہوتے ہیں۔

8. وزن کم کرنے میں مددگار

مینگوسٹین انسولین کے جواب کو بہتر بنا کر موٹاپے میں وزن کم کرنے میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین میں کیلوریز کم ہوتی ہیں، 100 گرام میں صرف 60 کیلوریز ہوتی ہیں۔ یہ سیر شدہ چربی سے پاک ہوتا ہے جو وزن کو برقرار رکھنے میں مدد دیتا ہے۔ مینگوسٹین کولیسٹرول سے پاک ہوتا ہے اور پیٹ کی چربی کو نمایاں طور پر کم کرتا ہے۔ یہ فائبر اور پانی سے بھرپور ہوتا ہے جو آپ کو زیادہ بھرا ہوا محسوس کراتا ہے اور بھوک کے جھٹکوں سے آپ کو روکتا ہے۔

9. جلد کے لیے مینگوسٹین کے فوائد

مینگوسٹین جلد کو گورا کرتا ہے۔ مینگوسٹین کے اینٹی آکسیڈنٹس فعال جلد کی دیکھ بھال کے اجزاء ہیں۔ مینگوسٹین کے چھلکے کا عرق پگمینٹیشن کو کنٹرول کرتا ہے اور اینٹی رنکل ہے۔ مینگوسٹین کے پھل کا گودا ایکنی کے داغوں کا علاج کرتا ہے اور بے عیب جلد فراہم کرتا ہے۔ اس پھل کی وٹامن مواد جلد کی زندگی اور چمک کو فروغ دیتا ہے۔

10. مینگوسٹین کے اینٹی ایجنگ اثرات

اینٹی آکسیڈنٹ چھلکے کا عرق اپنی اینٹی ایجنگ خصوصیات کے لئے مشہور ہے۔ مینگوسٹین (زینتھونز) فری ریڈیکلز کے ذریعہ نقصان پہنچائے گئے سیلوں کی مرمت کرتا ہے اور عمر رسیدگی کے عمل کو سست کرتا ہے۔ مینگوسٹین کے چھلکے کا عرق اینٹی-ایلاستیز اور اینٹی-کولاجینیز پر مشتمل ہوتا ہے جو آپ کی جلد کو مضبوط اور جوان بناتا ہے۔

مینگوسٹین کے مضر اثرات

مینگوسٹین خون بہنے کی خرابی کو فروغ دیتا ہے کیونکہ یہ خون جمنے کی عمل کو سست کر دیتا ہے۔ مینگوسٹین سرجری کے بعد خون بہنے کے خطرے کو بڑھاتا ہے۔

مینگوسٹین کے طویل مدتی استعمال سے لیکٹک ایسڈوسس پیدا ہوتا ہے جس سے متلی اور پیٹ کی تکلیف ہوتی ہے۔

مینگوسٹین کی مکمل شکل میں صحت کے منفی اثرات کی اطلاع دی گئی ہے۔

یہ دودھ پلانے والی ماؤں کے لئے ناگزیر ہے کیونکہ اس کی سرد مزاجی کی وجہ سے

0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments